Usay Mana Kar Bhi Hum Ne Dekh Liya | Urdu Poetry




Usay Mana kar Bhi Hum Ne Dekh Liya
Dil Jala Kar Bhi Hum Ne Dekh Liya
ab usay yaad hum nahin aatay
door ja kar bhi hum ne dekh liya
kitni veeranian hein aangan mein
ghar saja kar bhi hum ne dekh liya
woh jo kehta hai mujh ko harjai
us ko chah kar bhi hum ne dekh liya
ab bhi aankhon mein chubhan baqi hai
ashak baha kar bhi hum ne dekh liya
woh kisi tor mil nahin paya
sab ganwa kar bhi hum ne dekh liya
woh mera zabt aazmaata hai
hath chura kar bhi hum ne dekh liya

Voice: Imran Sherazi

اُسے مَنا کر بھی ہم نے دیکھ لیا
دل جَلا کر بھی ہم نے دیکھ لیا
اب اُسے یاد ہم نہیں آتے
دُور جا کر بھی ہم نے دیکھ لیا
کتنی ویرانیاں ہیں آنگن میں
گھر سجا کر بھی ہم نے دیکھ لیا
وہ جو کہتا ہے مجھکو ہرجائ
اُسکو چاہ کر بھی ہم نے دیکھ لیا
اب بھی آنکھوں میں چُبھَن باقی ہے
اشک بَہا کر بھی ہم نے دیکھ لیا
وہ کسی طور مِل نہیں پایا
سب گنوا کر بھی ہم نے دیکھ لیا
وہ میرا ضبط آزماتہ ہے
سوء مُسکرا کر بھی ہم نے دیکھ لیا
کاش وہ الوداع ہی کہہ دے مجھے
ہا تھ چھُوڑا کر بھی ہم نے دیکھ لیا

شاعر: نامعلوم
آواز: عمران شیرازی


No comments :

No comments :

Post a Comment