Hamesha Dair Kar Deta Hoon Main | Urdu Poetry by Munir Niazi




Munir Niazi Poetry | Hamesha Dair Kar Deta Hoon Main with Lyrics | Urdu/ Hindi Shayari by RJ Imran Sherazi

Hamesha Dair Kar Deta Hoon Main
Har Kaam Karnay May 
Zaroori Baat Kehne Ho
Koi Wada Nibhana Ho 
Usay Aawaz Deni Ho 
Usay Wapis Bulana Ho
Hamesha Dair Kar Deta Hoon Main
Madad Karni Ho Us Kee 
Yaar Ke Dhaarus Bundhana Ho
Bohat Dayreena Rustoo Par
Kisee Se Milne Jaanaa Ho 
Hamesha Dair Kar Deta Hoon Main
Budaltay Mausmo Ke Sair May 
Dil Ko Lagana Ho
Kisee Ko Yaad Rakhna Ho 
Kisee Ko Bhool Jana Ho
Hamesha Dair Kar Deta Hoon Main
Kisee Ko Maut Se Pehlay 
Kisee Ghum Se Buchana Ho
Haqeeqat Aur Thi Kuch Us Ko
Jaa Kay Yah Batana Ho
Hamesha Dair Kar Deta Hoon Main
Har Kaam Karnay May

Poet: Munir Niazi
Voice: Imran Sherazi

ہمیشہ دیر کر دیتا ہوں میں، ہر کام کرنے میں
ضروری بات کہنی ہو کوئی وعدہ نبھانا ہو
اسے آواز دینی ہو، اسے واپس بلانا ہو
ہمیشہ دیر کر دیتا ہوں میں
مدد کرنی ہو اس کی، یار کی ڈھارس بندھانا ہو
بہت دیرینہ رستوں پر کسی سے ملنے جانا ہو
بدلتے موسموں کی سیر میں دل کو لگانا ہو
کسی کو یاد رکھنا ہو، کسی کو بھول جانا ہو
ہمیشہ دیر کر دیتا ہوں میں
کسی کو موت سے پہلے کسی غم سے بچانا ہو
حقیقت اور تھی کچھ اس کو جا کے يہ بتانا ہو
ہمیشہ دیر کر دیتا ہوں میں

شاعر: منیر نیازی
آواز: عمران شیرازی


No comments :

No comments :

Post a Comment